imageshad.jpg

This Page has 11867viewers.

Today Date is: 10-12-18Today is Monday

پیغام مدارس سمینار ظفروال کی رپورٹ۔ رپوٹر۔ امداد اللہ طیب

  • ہفتہ

  • 2018-11-10

30 اکتوبر 2018 کو جامعہ کاشف العلوم ظفروال میں پیغام مدارس دینیہ سیمینار میں شرکت کا موقع ملا ۔ اور وفاق المدارس العربیہ اکابرین امت کے ارشادات سے مستفید ہونے کا موقع ملا ۔پیغام مدارس دینیہ ملک پاکستان کے ان معروضی حالات میں دینی مدارس کے نمائندہ بورڈ وفاق المدارس العربیہ کے حوالے سے دینی مدارس کے اجتماعی موقف کا اظہار ہے ۔جو اس وقت بہت ضروری ہے اس کے لئے جن اداروں، شخصیات، اور حلقوں نے محنت کی ہے وہ لائق تبریک و تشکر کے مستحق ہیں ۔وفاق المدارس العربیہ پاکستان کی جانب سے پیغام مدارس سمینار میں بنیادی اور اصولی باتیں تو وہی تھی جن کا ذکر بیشتر مواقع پر وفاق کی قیادت کرتی چلی آرہی ہے ،اور جس کا ذکر ضلع سیالکوٹ نارووال وفاق المدارس کے مسئول مولانامحمدطیب خان ،مولانا محمد ایوب خان اور مولانا قاضی عبدالرشید صاحب ناظم اعلیٰ وفاق المدارس پنجاب نے اپنے خطبات میں بڑی تفصیل سے کیا کے دینی مدارس شروع دن سے ہی اسلامی ریاست کے خلاف محاذ آرائی شریعت کے نفاذ کے لئے مسلح جنگ وطن عزیز میں دہشت گردی اور ملک میں امن و امان کی بالادستی کے بارے میں اس قبیح عمل کے آغاز سے ہی اپنے دوٹوک موقف کا اظہار کرتے آرہے ہیں تاہم اس کے باوجود دینی مدارس کے دوٹوک موقف اور اظہار کے علاوہ بھی لادینی طاقتیں دینی مدارس کی اس پر امن جدوجہد کو غلط رنگ دینے کی کوششیں کرتی رہتی ہیں مدارس میں اصلاحات لانے کی باتیں اور مدارس کو قومی دھارے میں لانے کی باتیں ہو رہی ہیں دہشت گردی اورانتہاپسندی کو ان سے نتھی کرنے کی کوششیں ہو رہی ہیں اور دینی مدارس کے اجلے کردار اور دامن کو داغدار کرنے کا شدت سے پراپیگنڈہ جاری ہے جس کی بنیاد پر دینی مدارس کو امتیازی سلوک اور بلاجواز پابندیوں کا سامنا ہے اللہ جزائے خیر عطا فرمائے ہمارے اکابرین کو کہ جنہوں نے بروقت حالات کا ادراک کرتے ہوئے دینی مدارس کے پیغام کو ملکی سطح پر متعارف کروانے کی مہم شروع کی ہے، پیغام مدارس مہم میں اول تو تحصیل ،ضلع پھر صوبہ لیول پر اور آخر میں ملکی لیول پر دینی مدارس کے اجلے کردار کو واضح کرنے کے لئے ان کی ملکی، ملی ،دینی ،علمی، اور معاشرتی خدمات کو بیان کیا جائے گا پہلی سطح کی مہم بحمد للہ تعالی کامیابی سے جاری و ساری ہے اللہ اس مہم کو کامیابی سے ہمکنار فرمائے پیغام مدارس دینیہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے مولانا ایوب خان نے فرمایا کہ دینی مدارس کا بنیادی مقصد اسلامی تعلیمات کے ماہرین پیدا کرنا ہے دینی مدارس جہاں اسلام کے قلعے ہیں وہاں ہدایت کے سرچشمے اور اشاعت دین کا بہت بڑا ذریعہ ہیں اس کے ساتھ ساتھ یہ دنیا کی سب سے بڑی این جی اوز بھی ہیں جو لاکھوں طلبا اور طالبات کو بلامعاوضہ تعلیم کے زیور کے ساتھ رہائش خوراک ابتدائی طبی امداد کی سہولت بھی مفت فراہم کر رہے ہیں یہ مدارس اسلام کی چھونیاں ہیں ان کے تمام مقاصد اور اہداف صرف بنی نوع انسان کی اصلاح کے گرد گھومتے نظر آتے ہیں ان کا مقصد معاشرے میں امن و سلامتی ہے انہوں نے وطن عزیز سے دہشت گردی کے خاتمے اور استحکام کے لئے حکومت اور افواج پاکستان کے حلیف اور رفیق ہونے کا اعلان کیا ان کی طرف سے یہ دعویٰ بھی سامنے آیا کہ اگر خدانخواستہ پاکستان پر برا وقت آیا تو وہ فوج کے شانہ بشانہ ملک کا دفاع کریں گے ان کے بعد وفاق المدارس پنجاب کے ناظم اعلیٰ مولانا قاضی عبدالرشید نے خطاب کرتے ہوئے فرمایا کہ پیغام مدارس سمینار کا مقصد عوام کو دینی مدارس کی مشکلات سے آگاہ کرنا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ قوم کو ان کی خدمات سے بھی آگاہ کرنا ہے انہوں نے کہا کہ مدرسہ اتنا ہی پرانا ہے جتنا اسلام پرانا ہے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم پر پہلی وحی نازل ہوتے ہی مدرسہ قائم ہو گیا تھا دارارقم سے صفہ میں منتقل ہوا موجودہ دینی مدارس صفہ کی شاخیں ہیں مدارس کا نصاب متعین ہے آج ہمیں نصاب کو بدلنے اور اس میں تبدیلی کرنے کا مشورہ دیا جاتا ہے مدرسہ کے نصاب پر اگر غور کیا جائے تو یہ دنیا کا سب سے معتدل اور متوازن نصاب ہے جو ہمارے مدرسوں میں رائج ہے اس میں تشدد اور انتہا پسندی کا نام تک نہیں ہے مدارس کے نصاب کو بدلنے کا مشورہ دینے والے اپنے نصاب تعلیم پر غور کریں انہوں نے کہا کہ دینی مدارس کے طلباء وحدت کی نشانی اور اتحاد و یکجہتی کا عملی ثبوت ہیں ان کا کہنا تھا کہ وفاق المدارس جیسا ادارہہمارے لئے ایک نعمت ہے جس کی مثال دیگر ممالک میں نہیں ملتی یہ امتیاز صرف وطن عزیز کے دینی مدارس کو حاصل ہے کہ وہ ایک مربوط نظام تعلیم سے وابستہ ہیں اور مدارس کے تحفظ کے لئے ان کی آواز ایک ہے اس عظیم وفاق المدارس العربیہ پاکستان کے موجودہ ناظم اعلی قاری محمد حنیف جالندھری کا یہ قول بالکل درست ہے کہ وفاق المدارس العربیہ پاکستان کا وجود یہاں کے مدارس کے لئے اللہ کی ایک بہت بڑی نعمت ہے باقی ممالک میں مدارس ہیں وفاق نہیں واحد ملک پاکستان ہے جہاں وفاق بھی ہے اور دینی مدارس بھی انہوں نے وفاق کی خدمات کا ذکر کرتے ہوئے فرمایا کہ رابطہ عالم اسلامی کی طرف سے وفاق المدارس کو دنیا میں ایک سال میں سب سے زیادہ حفاظ بنانے کے اعزاز میں دنیا کے سب سے بڑےقرآن ایوارڈ سے نوازا گیا پاکستان میں دنیا کے بہترین دینی مدارس ٹاپ لسٹ پر ہے جہاں پرپوری دنیا سے طلباء علم حاصل کرنے کے لیے آتے ہیں جو پاکستان کے مفت کے سفیر ہیں پورے عالم کفر کا دینی مدارس کی مخالفت پر کمربستہ ہونا ان کے حق پر ہونے کی دلیل ہے مدارس مین سٹریٹ پاور ہیں عوام سے ان کا ہمہ جہت رابطہ ہوتا ہے ۔سیمینار کا اختتام مولانا قاضی عبدالرشید دامت برکاتہم کی دعا پر ہوا پیغام مدارس سمینار میں تمام ضلع کے معروف علماء، ائمہ مساجد اور دینی مدارس کے طلباء نے شرکت کی ۔سٹیج سیکرٹری کے فرائض علاقہ کے معروف عالم دین حضرت مولانا محمد قاسم صدیقی صاحب نے ادا کیے اور اپنے میزبان حضرت مولانا مفتی محمد امجد صاحب کا شکریہ ادا کیا اللہ تعالی ان دینی مدارس کو تاقیامت آباد رکھے

صحت و تندرستی کے لیے خاص مشورے