finalishtihaartop.jpg

This Page has 64718viewers.

Today Date is: 24-05-19Today is Friday

میں حسن کائنات ہوں از :پاپونش ثناء ملک

  • جمعہ

  • 2019-04-26

میں حسن کائنات ہوں۔ تتلیوں سے شوخی لے کر پھولوں سے رنگ لے کر چاند سے نور لے کر خدا نے ایک نازک آبگینہ بنایا۔ عورت کی شکل میں یہ آبگینہ اشرف المخلوقات کو عطا کر کے گھروں کو رونق بخشی۔ عورت بیٹی کے روپ میں رحمت قرار پائی۔زوجہ کی شکل میں سکون قرار پائی تو ماں کی شکل میں جنت۔ اللّٰہ تعالیٰ نے اس نازک آبگینہ کو پردے کا حکم دیا۔بے شک ہر قیمتی چیز کو چھپایا جاتا ہے۔جتنی چیز قیمتی ہو اس کو اتنا ہی کور کیا جاتا ہے۔ جیسے کہ عام کتاب کو ڈھانپا نہیں جاتا جبکہ قرآن مجید کو کپڑے سے کور کیا جاتا ہے۔ آمد مصطفیٰ کے بعد جہاں اسلام کا بول بالا ہوا۔وہاں انسان کی گزشتہ طرز زندگی تبدیل کر دیا۔ اگرچہ ابھی پردے کا کوئی واضح حکم سامنے نہیں آیا تھا۔ مسلمان خواتین معلم مکتب الہیٰ کی خدمت میں پیش ہوئیں اور کافروں کے تنگ کر کی شکایت کی۔ رحمت دو جہاں نے ان کافروں کو اس کام سے باز رہنے کا حکم دیا۔تو انھوں نے کہا ہمیں کیا پتہ عورت مسلمان ہے یا کافر ہم تو اپنی عورتوں سے ہنسی مذاق کرتے ہیں۔تب اس مسئلے کے حل کے لیے آیت نازل ہوئی۔جس میں مسلمان عورتوں کو پردے کا حکم دیا گیا۔جس سے مسلمان اور کافر عورتوں میں فرق واضح ہو گیا۔ دنیا تیز رفتاری سے ترقی کی راہ پر گامزن ہے۔اس تیز رفتاری میں اسلام کے اصول ،قانون،دیانت داری،کے ساتھ ساتھ پردہ داری کو بھی پیروں تلے کچل دیا ہے۔ایک کل کے مسائل میں سے ایک اہم مسئلہ بے پردگی بھی ہے۔کچھ لوگوں کا کہنا ہے پردہ دل کا ہوتا ہے چہرہ چھپانے سے کچھ نہیں ہوتا۔تو جناب آپ تن سے لباس بھی اتر دیں کیونکہ پردہ تو دل کا ہوتا ہے۔کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ چہرے کا پردہ اسلام میں ہے ہی نہیں۔ سورۃ احزاب میں واضح حکم ہوا دیا گیا ہے۔ اپنے چہروں کو گھونگھٹ کی مدد سے چھپا لو یعنی کہ اسلام میں ہر اس چیز کو چھپائیں جس سے غیر مرد آپ طرف متوجہ ہو سکتا ہے۔ پرانے دور میں خواتین اپنی اوڑھنیوں سے گھنڈ نکلا کرتی تھیں۔دور جدید میں پردہ کرنے کے طریقے بھی جدید ہوتے گئے۔اور اب بہت کم لوگ ہیں۔جو پردے کو اہمیت دیتے ہیں۔اسی طرح بہت کم خواتین پردے کا حق ادا کرتے ہیں۔ خاندانی اور عزت دار لوگ آج بھی پردے کو اہمیت دیتے ہیں۔ میری تمام لوگوں سے استدعا ہے کہ کوشش کریں اپنے اردگرد اسلام کی علمبردار خواتین کو عزت دیں اور ان کے لیے آسانیاں پیدا کریں۔

صحت و تندرستی کے لیے خاص مشورے