finalishtihaartop.jpg

This Page has 104741viewers.

Today Date is: 18-09-19Today is Wednesday

(شیریں سید) نظم.... اور کتنا لہو بہاؤ گے....

  • جمعہ

  • 2019-08-23

اور کتنا لہو بہاؤ گے۔۔۔۔۔۔ جو بھی کر لو مگر یہی سچ ہے۔۔۔۔۔۔ خون تو رائگاں نہیں جاتا۔۔۔۔۔۔ ایک مسلی ہوئی کلی کا بھی۔۔۔۔۔۔ تم نے تو گلستاں اجاڑا ہے۔۔۔۔۔۔ اک حسیں آشیاں اجاڑا ہے۔۔۔۔۔۔ کس قدر ظلم اور ڈھاؤ گے۔۔۔۔۔۔ اور کتنا لہو بہاؤ گے.... ؟۔۔۔۔۔۔۔ بین کرتی ہوئی یہ آوازیں۔۔۔۔۔۔۔ راستوں میں بِچھی ہوئی لاشیں۔۔۔۔۔۔۔ سسکیاں چھوٹے چھوٹے بچوں کی۔۔۔۔۔۔۔۔ رات دن بیٹیوں کی فریادیں۔۔۔۔۔۔۔۔ تم پہ جب قہر بن کے ٹوٹیں گی۔۔۔۔۔۔۔۔ پھر کہاں خود کو تم چھپاؤ گے۔۔۔۔۔۔۔۔ اور کتنا لہو بہاؤ گے۔۔۔۔۔۔۔۔ تم بھی خود کو "سپاہی" کہتے ہو۔۔۔۔۔۔۔۔ تم پہ لعنت ہزار ہو رب کی۔۔۔۔۔۔۔۔ تم کو لگ جائے بدعا سب کی۔۔۔۔۔۔۔۔ بز دلو اب کے ہار جاؤ گے۔۔۔۔۔۔۔۔ اور کتنا لہو بہاؤ گے۔۔۔۔۔۔۔۔ شیریں سیّد

صحت و تندرستی کے لیے خاص مشورے